نواز شریف کے جنرل اسمبلی کے اجلاس سے قبل پاکستان نے ڈرون حملوں کا مسلہ سلامتی کونسل میں بھی اٹھا دیا

Sep 27, 2013| Courtesy by : pn.com.pk

1175049_10151926367275820_1329420384_n

نیویارک (سپیشل رپورٹر سے) وزیر اعظم پاکستان میاں نواز شریف کے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے خطاب سے قبل پاکستان کی جانب سے مشیر خارجہ سرتاج عزیز نے ڈرون حملوں کا مسلہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں بھی اٹھا دیا؛ دفتر خارجہ کے ترجمان اعزاز احمد چوہدری نے یہاں سلامتی کونسل سے سرتاج عزیز کے خطاب کے بعد میڈیابریفننگ کے دوران کہا کہ انسانی حقوق کی کونسل کے بعد سلامی کونسل میں ڈرون حملوں کا مسلہ اٹھایا گیا ہے اور جنرل اسمبلی میں جمعہ کی صبح گیارہ بجے (مقامی وقت کے مطابق ) وزیر اعظم نواز شریف یہ مسلہ اپنے خطاب میں اٹھائیں گے ۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان ان حملوں کو عالمی قوانین اور انسانی حقوق کی خلاف ورزی سمجتاا ہے اور عالمی سطح پر اس مسلہ کو اٹھانے کے اپنے اقدام کی پیری کرتا رہیگا اور عالمی رائے عامہ کو حملوں کو روکے جانے کے اپنے موقف کے حق میں ہموار کرتا رہیگا ۔ مشیر خارجہ سرتاج عزیز نے سلامتی کونسل کےاجلاس سے خطاب کے دوران کہا کہ ڈرون حملے عالمی قوانین ہی نہیں بلکہ انسانی حقوق کے حوالے سے بھی عالمی قوانین کی خلاف ورزی ہیں اور دہشت گردی کے خلاف جنگ کے حوالے سے اجتماعی کوششوں پر بھی اثر انداز ہوتے ہیں ۔ سرتاج عزیز نے سلامتی کونسل کی توجہ ڈرون حملوںمیں سویلین بالخصوص بچوں اور خواتین کی ہلاکتوںکے بارے میں بھی دلائی ۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل (بانی کی مون) کی اس آبزرویشن سے بھی متفق ہے کہ ڈرون حملوں سے بچوں کی بھی لکاتیں ہوتی ہیں اور ان حملوں کے ان پر سنگین نوعیت کے نفسیاتی اثرات مرتب ہوتے ہیں ۔ – See more at: http://www.pn.com.pk/details_ur.php?uid=7638#sthash.xDmbYGPe.dpuf